> <

صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی۔ بہروز سبزواری

 بہروز سبزواری فلم، ٹیلی ویژن اور سٹیج کے ایک معروف پاکستانی اداکار بہروز سبزواری 16 فروری 1957ء کو کراچی میں پیدا ہوئے۔ 1968ء میں اداکاری کا آغاز کیا۔ دس سال کی عمر میں بچوں کے فینسی ڈریس شو میں کام کیا۔ اس کے بعد بچوں کے لیے ایک ڈرامے ’’نانا جان دادا جان‘‘ کے لیے منتخب ہوئے۔ جشن تمثیل، ارژنگ اور انسان اور آدمی جیسے ڈراموں میں اپنی معیاری اداکاری سے اپنی پوزیشن مستحکم کر لی یہاں تک کہ ان کی ملک گیر شہرت شوکت صدیقی کے ناول پر تیار کردہ سیریل ’’خدا کی بستی‘‘ سے شروع ہوئی۔ اس میں انہوں نے نوشہ کا کردار ادا کیا۔ قاضی واجد اور بہروز سبزواری کی جاندار اداکاری کی بدولت سلسلہ وار ڈراما ’’خدا کی بستی ‘‘ پاکستان ٹیلی وژن کا سرمایہ بن گیا۔ اس کے بعد میرا نام منگو ، تعبیر ، آبگینے ، ان کہی اور تنہائیاں میں کام کیا۔ خاص طور سے ’’تنہائیاں‘‘ میں قباچہ کے نام سے موسوم کردار سے بے پناہ شہرت پائی جس کی وجہ سے عوامی سطح پر آج بھی لوگ قباچہ کے نام سے جانتے اور پہچانتے ہیں۔ اس کے علاوہ فلموں میں بھی کام کیا ۔ آج کل مختلف ٹی وی چینلز پر ڈراموں میں اداکاری کر رہے ہیںاور خوبصورت کریکٹر رول نبھا رہے ہیں۔ حکومت پاکستان نے انہیں 14 اگست 2008ء کو صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی عطا کیا تھا ۔

UP